کپاس کے کاشتکار بہتر پیداوار کیلئے تصدیق شدہ زہر آلود بیج استعمال کریں‘ترجمان محکمہ زراعت

لاہور (اُردو پوائنٹ ، لائیوسٹاک پاکستان) ترجمان محکمہ زراعت نے کہا ہے کہ کپاس کے کاشتکار کھیلیوں پر کاشت کیلئے 6تا8کلوگرام تصدیق شدہ زہر آلود بیج استعمال کریں‘ بی ٹی اقسام کے ساتھ 20فیصد رقبہ پر روایتی اقسام کاشت کریں‘کپاس کی بہتر پیداوار کے لئے پودے سے پودے کا فاصلہ 9سے 12انچ رکھیں‘ کپاس کی کاشت کے لئے 17500سے 23000فی ایکڑ پودوں کی تعداد یقینی بنائیں‘ پٹڑیوں پر کاشت کی صورت میں تھوڑے وقت میں زیادہ رقبہ پر کپاس کی کاشت کی جا سکتی ہے۔ترجمان نے مزید کہا کہ کپاس کی اچھی پیداوار کیلئے ایسی زرخیز میرا زمین بہتر رہتی ہے جو تیاری کے بعد بھربھری اور دانے دار ہو جائے‘ اس میں نامیاتی مادہ کی مقداربہترہو، پانی زیادہ جذب کرنے اور دیر تک وتر قائم رکھنے کی صلاحیت بھی موجودہو‘ زمین کی نچلی سطح سخت نہ ہو تا کہ پودے کی جڑوں کو نیچے اوراطراف میں پھیلنے میں دشواری نہ آئے‘ اس کیلئے زمین کی تیا ر ی کے وقت گہر ا ہل چلائیں اور زمین کی ہمواری بذریعہ لیزر لیولر کریں تا کہ پودے کی جڑ یںآ سا نی سے گہرا ئی تک جا سکیںاور وتر دیر تک قائم رہے ۔

انہوں نے کہاکہ پچھلی فصلات کی باقیات کو جلانے کی بجائے انہیں اچھی طرح زمین میں ملانا چاہیے‘ اس مقصد کیلئے روٹا ویٹر، ڈسک ہیرو یا مٹی پلٹنے والا ہل استعمال کریں تاکہ بوائی میں کسی قسم کی دشواری پیش نہ آئے ۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے