لمپی سکن ویکسین کی پیداوار میں اضافہ کیلئے ہنگامی پلان مرتب کیا جا رہا ہے

عملہ کو ہسپتالوں میں موجودگی یقینی بنانے کی سختی سے تاکید کی گئی ہے تاکہ مویشی پال کو سہولیات کی فراہمی میں کوئی کمی نہ آئے، صوبائی وزیر لائیوسٹاک سردار شہاب الدین

لاہور( لائیوسٹاک پاکستان) لمپی سکن بیماری ایک نیشنل ایمرجنسی ہے جس کی روک تھام اور ویکسین کی پیداواری صلاحیت میں اضافہ کیلئے ہنگامی پلان ترتیب دیا جارہا ہے۔ ان خیالات کا اظہار صوبائی وزیر لائیوسٹاک سردار شہاب الدین سیہڑنے ایک اہم اجلاس کے دوران کیا۔ تفصیلات کے مطابق صوبائی وزیر لائیوسٹاک نے لاہور میں منعقدہ ایک اہم اجلاس کی صدارت کی۔ سیکرٹری لائیو سٹاک محمد مالک بھُلہ نے صوبائی وزیر کو محکمانہ امور بارے تفصیلی بریفنگ دی۔ لمپی سکن بیماری بارے سیکرٹری لائیوسٹاک کا کہنا تھا کہ محکمانہ عملہ اس بیماری سے نبرد آزما ہونے کیلئے شب و روز مصروف عمل ہے نیز صوبہ بھر میں لمپی سکن ویکسین 20لاکھ مویشیوں کو لگائی جا چکی ہے۔

اس موقع پر صوبائی وزیر کا کہنا تھا کہ لمپی سکن بیماری سمیت تمام امراض کے خلاف موثر حکمت عملی ترتیب دی جارہی ہے۔ انہوں نے متعلقہ افسران کو ہدایات جاری کرتے ہوئے کہا کہ مساجد وعوامی مقامات پر لمپی سکن بیماری بارے آگاہی فراہم کی جائے نیز مویشی پال کسان مویشیوں میں بیماری کی علامات کی صورت میں فی الفور قریبی ویٹرنری ہسپتال سے رابطہ کریں۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ خدمات کی فراہمی میں کسی قسم کی کوتاہی برداشت نہیں کی جائے گی جبکہ مویشی پال کی شکایات کے فوری ازالہ کیلئے بھی اقدامات کئے جا رہے ہیں۔ صوبائی وزیر سردار شہاب الدین کا مزید کہنا تھا کہ تمام عملہ کو ہسپتالوں میں اپنی موجودگی یقینی بنانے کی سختی سے تاکید کی گئی ہے تاکہ مویشی پال کو سہولیات کی فراہمی میں کوئی کمی نہ آئے۔ صوبائی وزیر نے تمام افسران کو سرپرائز فیلڈ وزٹ کرنے کی ہدایات جاری کرتے ہوئے کہا کہ بہت جلد تمام اضلاع کے دورے کر کے محکمانہ خدمات کا تفصیلی جائزہ لوں گا۔ اجلاس میں ایڈیشنل و ڈپٹی سیکرٹریز، ڈائریکٹر جنرلز اور دیگر افسران نے بھی شرکت کی۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے