موٹرسائیکل پرزے تیسری شیڈول لسٹ سے نکالنے کا مطالبہ

حکومت کے محاصل میں اضافہ ، اسمگلنگ کی حوصلہ شکنی ہوگی ،خالد وحید

اسلام آباد (اے پی پی)آل پاکستان موٹرسائیکل اسپیئر پارٹس امپورٹر اینڈ ڈیلر ایسوسی ایشن (اے پی ماسپیڈ)کے چیئرمین خالد وحید نے کہا ہے کہ موٹرسائیکل کے پرزوں (اسپیئر پارٹس)کو تیسری شیڈول لسٹ سے ہٹایا جائے ، 850 موٹر سائیکلز اور 226 کاروں کی یومیہ رجسٹریشن ہوتی ہے مگر آٹو اور موٹرسائیکلوں کے پرزوں کی درآمد میں کمی باعث تشویش ہے ،گزشتہ روز ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ موٹرسائیکل اسپیئر پارٹس عام صارف کی مصنوعات نہیں ہیں اس لیے ان کو تیسری شیڈول لسٹ سے ہٹایا جانا چا ہیے جن کو ایس ٹی جی او نمبر 103/2019، مورخہ 4 جولائی 2019 کے تحت تیسری شیڈول لسٹ میں شامل کیا گیا تھا جس کی وجہ سے شعبے کو مختلف مسائل کا سامنا ہے ۔انہوں نے کہا کہ ایم آر پی (ریٹیل پرائس)کو موٹرسائیکل اسپیئر پارٹس کے درآمدی مرحلہ پر ڈالنا کئی پیچیدگیوں کو جنم دیتا ہے ،آٹو پارٹس کو تیسرے شیڈول میں شامل کرنے کی وجہ سے کسٹمز ریونیو میں کمی کے علاوہ دیگر مسائل میں بھی اضافہ کا خدشہ ہے ۔ ۔ خالد وحید نے ارباب اختیار سے درخواست کرتے ہوئے کہا کہ آٹو اور موٹرسائیکلز کے پرزوں کو تیسرے شیڈول سے خارج کیا جائے تاکہ اسمگلنگ اور غیر سرکاری چینلز کی حوصلہ شکنی کی جا سکے جس سے مختلف ٹیکسز اور ڈیوٹیز کی مدمیں حکومت کے محاصل میں بھی اضافہ ہو گا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے