پنجاب: کم آمدن والےملازمین کیلئے اپارٹمنٹس اور 11 ہزار ملازمین کو اپ گریڈ کرنے کی منظوری

20صوبائی اور 10فیصد کوٹہ وفاقی ملازمین کیلئے مختص ،ایل ڈی اے کوپنجاب بینک کیساتھ معاہدے کی اجازت ، سیکرٹریٹ کے چھوٹے ملازمین اپ گریڈ ، دو سیمنٹ پلانٹ لگیں گے ، محکمہ بہبود کے ڈاکٹروں کو خصوصی الاؤنس ملے گا ، کچی آبادیوں کے امور کے جائزہ کیلئے کمیٹی کی تشکیل :فردوس عاشق کی بریفنگ ، بزدار سے یو اے ای کے سفیر کی ملاقات

لاہور(سیاسی رپورٹر سے ، )وزیراعلیٰ سردار عثمان بزدار کے زیر صدارت پنجاب کابینہ کے اجلاس میں کم آمدن والوں کیلئے 35 ہزار اپارٹمنٹس تعمیر کرنے کی منظوری دیدی ہے ۔ کابینہ نے ایل ڈی اے کو اپارٹمنٹس کے لئے بینک آف پنجاب کے ساتھ معاہدے کی منظوری دی۔پہلے مرحلے میں ایل ڈی اے سٹی میں 4000 اپارٹمنٹس بنائے جائیں گے اور ایک فلیٹ کی قیمت تقریباً 27 لاکھ روپے تک ہو گی ۔ اپارٹمنٹس میں 50 فیصد کوٹہ عوام کے لئے ہو گا ۔ 20 فیصد کوٹہ صوبائی ملازمین، 20 فیصد کوٹہ ایل ڈی اے ملازمین اور 10 فیصد کوٹہ وفاقی ملازمین کیلئے مختص ہو گا۔ وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کی زیر صدارت وزیر اعلیٰ آفس میں صوبائی کابینہ کا 41واں اجلاس ہوا ۔ پنجاب کابینہ کا اجلاس تین گھنٹے سے زائد جاری رہا ، اجلاس میں بزدار نے صحافی ا ور وکلا برادری کیلئے بھی کوٹہ مختص کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ صحافی اور وکلا برادری کے لئے خصوصی کوٹہ مقرر کرنے کا جائزہ لیا جائے ۔ اجلاس میں سول سیکرٹریٹ میں کام کرنے والے چھوٹے ملازمین کو اپ گریڈ کرنے کا فیصلہ کیا گیا ۔ کابینہ نے ڈرائیورز، آٹو الیکٹریشنز، مکینکس اور ڈسپیچ رائیڈرزکو اگلے گریڈ میں ترقی دینے کی منظوری دے دی۔اس فیصلے سے 11 ہزار سے زائد چھوٹے ملازمین مستفید ہوں گے ۔اجلاس میں ملتان میں پرانی غلہ منڈی گودام کی جگہ 200بستروں پر مشتمل مدر اینڈ چائلڈ ہسپتال کے قیام کی باقاعدہ منظوری دی گئی۔ہسپتال کے قیام کے لئے 500 ملین روپے کے فنڈز کے اجرا کی بھی منظوری دی گئی ۔ اجلاس میں پنجاب میں 2 مزید سیمنٹ پلانٹ لگانے کی منظوری دی گئی ۔ نئے سیمنٹ پلانٹ ڈیرہ غازی خان اور میانوالی میں لگائے جائیں گے ۔عثمان بزدار نے دیگر سیمنٹ پلانٹس کے این او سیز کے اجرا کے عمل کو مزید تیز کرنے کی ہدایت کی ۔ اجلاس میں محکمہ بہبود آبادی میں کام کرنے والے ڈاکٹرز کوبھی خصوصی الاؤنس دینے کا فیصلہ کیا گیا ۔ کابینہ نے محکمہ بہبود آبادی کے ڈاکٹرز کو ہیلتھ پروفیشنل اینڈ سپیشل ہیلتھ کیئر الاؤنس دینے کی منظوری دے دی۔ اجلاس میں پنجاب میں کچی آبادیوں کو ریگولر کرنے کی سکیم پر نظر ثانی کیلئے اعلیٰ سطح کی کمیٹی تشکیل دی گئی ۔ کمیٹی کچی آبادیوں سے متعلقہ امور کا جائزہ لیکر حتمی سفارشات پیش کرے گی۔صوبائی ڈرگ مانیٹرنگ ٹیم کے قیام اور پنجاب ہیپاٹائٹس رولز کے مسودے ،پنجاب میوزیم ایکٹ 2021کے مسودے ،پاکستان ٹریول ایجنسی ایکٹ 1976 میں ترامیم ،سرکاری یونیورسٹیوں میں رجسٹرار اور کنٹرولر آف ایگزامینیشن کے عہدوں کے لئے قواعد وضوابط،پنجاب پولیس ڈیپارٹمنٹ رولز 2017 میں ترمیم کی منظوری دی گئی۔ اس ترمیم سے سٹینوگرافرز اہلیت کے معیار میں تبدیلی کی جا سکے گی۔ اجلاس میں پرائیویٹ وائلڈ لائف بریڈنگ فارمز کی رجسٹریشن اور تجدید کی فیس میں اضافے کا فیصلہ کیا گیا ۔ کابینہ نے رجسٹریشن اور تجدید کی فیس میں اضافے ،فاریسٹ ایکٹ میں ترمیم اورپنجاب اربن اینڈ پیری اربن فاریسٹ پالیسی 2020 ،ایم آئی ٹی ایکٹ کو میوہسپتال اور کنگ ایڈورڈ میڈیکل کالج میں نافذ کرنے ،دی پنجاب میڈیکل ٹیچنگ انسٹی ٹیوشنز (ریفارمز)ترمیمی ایکٹ 2020 میں ترمیم کی منظوری دی ۔ پنجاب کابینہ نے ملتان جمخانہ کیلئے سرکاری اراضی لیز پر دینے کا جائزہ لینے کے حوالے سے کمیٹی تشکیل دی۔کمیٹی ملتان جمخانہ کے قیام کے لئے سرکاری اراضی دینے کے امور کے حوالے سے حتمی سفارشات پیش کرے گی۔ صوبائی کابینہ اجلاس کے بعد میڈٰیا کو بریفنگ دیتے ہوئے فردوس عاشق اعوان نے بتایا کہ اب کم آمدن والے بھی اپنا گھر بنا سکیں گے ۔یہ اپارٹمنٹس 20 سال کی آسان اقساط پر فراہم کئے جائیں گے ۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے