حکومت پنجاب کا مویشی پال حضرات کو سائیلیج مشینیں فراہم کرنے کا اعلان

فیصل آباد(لائیوسٹاک پاکستان) خوشحالی کسان کی ترقی پاکستان کی کے منصوبہ کے تحت حکومت پنجاب نے 3لاکھ روپے فی مشین سبسڈی پر مویشی پال حضرات کو سائیلیج مشینیں فراہم کرنے کا اعلان کیا ہے اور سائیلیج مشینیں حاصل کرنے کے خواہشمند مویشی پال حضرات سے 6دسمبر تک درخواستیں طلب کر لی ہیں اور بتایا ہے کہ منظور شدہ درخواستوں کی حتمی فہرست 20دسمبر کو جاری کی جائے گی جبکہ سائیلیج مشینیں حاصل کرنے والے خوش نصیب مویشی پال حضرات سائیلیج مشینیں در آمد کرنے والی پری کوالیفائیڈ فرموں سے اپنی بکنگ 10جنوری تک کروانے کے پابند ہوں گے جنہیں یکم فروری سے سائیلیج مشینوں کی فراہمی شروع کر دی جائے گی۔

محکمہ لائیو سٹاک و ڈیری ڈویلپمنٹ فیصل آباد ڈویژن کے ڈائریکٹر ڈاکٹر اشفاق احمد انجم نے اے پی پی کو بتایاکہ سائیلیج مشینیں لائیو سٹاک فارمرز اور مویشی پال حضرات کیلئے انتہائی کار آمد ثابت ہوں گی اور اس سے سبز چارے کو محفوظ کر کے اس وقت استعمال کیا جا سکے گا جب چارے کی قلت ہوتی ہے۔

انہوں نے کہاکہ حکومت ہر سائیلیج مشین پر 3لاکھ روپے کی سبسڈی فراہم کرے گی۔انہوں نے بتایاکہ سائیلیج مشین حاصل کرنے کیلئے متعلقہ افراد کا 10سے 25ایکڑ رقبہ کا مالک یا مزارع یاکاشت کنندہ ہونا ضروری ہے۔انہوں نے بتایاکہ مویشی پال شخص کے پاس 10سے 50تک مویشی موجود ہونے چاہئیں جن کی محکمہ لائیو سٹاک کی جانب سے 9211پر رجسٹریشن کی تصدیق متعلقہ ضلعی آفیسر کرے گا۔انہوں نے بتایا کہ لائیو سٹاک فارمر 2سال سے پہلے سائیلیج مشین فروخت نہیں کر سکے گا اور اگر وہ چاہے تو مشین دوسرے افراد کے ساتھ شیئر بھی کر سکتا ہے۔انہوں نے کہاکہ اگر شرائط سے ہٹ کر مشین کا غلط استعمال کیا گیا یا مشین فروخت کی گئی تو متعلقہ مویشی پال افراد کے خلاف سخت قانونی کاروائی کی جائے گی اور اس سے محکمہ مال ریکوری ایکٹ کے تحت رقم بھی وصول کی جائے گی۔انہوں نے کہاکہ  6دسمبر کے بعد کوئی درخواست وصول نہیں کی جائے گی۔انہوں نے کہاکہ مزید معلومات و رہنمائی کیلئے محکمہ لائیو سٹاک سے رابطہ کیا جا سکتا ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے