پنجاب میں رجسٹرڈ نرسری مالکان کو زرعی آلات کی خریداری کے لیے تین لاکھ روپے کی معاونت فراہم کی جائے گی،ترجمان

اسلام آباد (لائیوسٹاک پاکستان) محکمہ زراعت پنجاب کے ترجمان نے کہاہے کہ صوبہ بھر میں رجسٹرڈ نرسری مالکان کو زرعی آلات کی خریداری کے لیے تین لاکھ روپے کی معاونت فراہم کی جائے گی ۔ترجمان نے بتایاکہ محکمہ زراعت پنجاب کے مطابق 36 کروڑ روپے کی لاگت سے پھلوں کی پیداوار میں اضافہ کے قومی منصوبہ پر عملدرآمد جاری ہے۔

اس منصوبہ کے تحت رجسٹرڈ نرسریوں کو جدید شیڈ / ٹنل اور نرسری آلات کےلئے منتخب رجسٹرڈ نرسری مالکان کو 3 لاکھ روپے فی نرسری فراہم کیے جائیں گے اور رجسٹرڈ نرسری مالکان کو سرکاری جرم پلازم یونٹ سے چشمہ اور قلمیں فراہم کی جائیں گی۔ حکومتی منصوبے سے مستفید ہونے کیلئے ضروری ہے کہ نرسری میں کم از کم تین سال سے پھلدار پودوں کی افزائش کا کام جاری ہو۔

نرسری میں تمام بنیادی سہولیات سکرین ہائوس، گرین شیڈ، پانی کی فراہمی، بڈنگ میٹریل، اوزار اور ماہر لیبر موجود ہو۔نرسری میں پھلوں کے پودے (نرسری) پیدا کرنے اور بروقت فراہمی کی صلاحیت موجود ہو۔مقامی جرم پلازم یونٹ (جی پی یو ) سے رابطہ میں ہوں اور وہاں سے چشمہ /قلم حاصل کرتے ہوں۔ہر ضلع کے نرسری مالکان کی درخواست کی درخواست علیحدہ ہوگی۔یکم جنوری 2020 سے رجسٹرڈ نرسریاں قرعہ اندازی میں شامل ہوں گی جبکہ تمام سرکاری ادارے رجسٹرڈ نرسریوں سے پودے خریدنے کے پابند ہوں گے۔