اقتصادی سروے کے تحت سابق حکومت کی مویشی پال اسکیم انتہائی کامیاب رہی

رواں مالی سال میں مویشیوں کی تعداد میں 19 لاکھ کا اضافہ ہوا، مویشیوں کی تعداد 5 کروڑ 15لاکھ سے بڑھ کر 5 کروڑ 34 لاکھ ہوگئی ہے، بھینسوں،بھیڑوں، بکریوں کی تعداد میں ریکارڈ اضافہ ہوا۔اقتصادی سروے رپورٹ کے خدوخال

اسلام آباد(لائیوسٹاک پاکستان) اقتصادی سروے کے تحت سابق حکومت کی مویشی پال اسکیم انتہائی کامیاب رہی، رواں مالی سال میں مویشیوں کی تعداد میں 19لاکھ کا اضافہ ہوا، مویشیوں کی تعداد5کروڑ 15لاکھ سے بڑھ کر 5کروڑ 34لاکھ ہوگئی ہے، بھینسوں،بھیڑوں، بکریوں کی تعداد میں ریکارڈ اضافہ ہوا۔تفصیلات کے مطابق وفاقی حکومت نے مالی سال 22-2021 کا اقتصادی جائزہ سروے جاری کر دیا، جس کے تحت ایک سال میں بھینسوں کی تعداد میں 13لاکھ اضافہ ہوا، بھینسوں کی تعداد 4 کروڑ 24لاکھ سے بڑھ کر 4کروڑ 37لاکھ ہوگئی ہے، ایک سال میں بھیڑوں کی تعداد میں 3لاکھ کا اضافہ ہوا، بھیڑوں کی تعداد 3کروڑ 16لاکھ سے بڑھ کر 3کروڑ 19لاکھ ہوگئی ہے،بکریوں کی تعداد میں 22لاکھ اضافہ ہوا ، بکریوں کی تعداد8کروڑ 3لاکھ سے بڑھ کر8کروڑ 25لاکھ ہوگئی ہے، اونٹوں کی تعداد میں کوئی اضافہ نہیں ہوا، اونٹوں کی تعداد 11لاکھ برقرار رہی، گھوڑوں کی تعداد 4لاکھ اور خچروں کی تعداد 2 لاکھ برقرار رہی۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے